Aaj News

حکومت نے 300 سے کم یونٹ پر فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ روک دی

فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ سے متعلق وزیراعظم کے حکم پر عمل درآمد کا آغاز ہوگیا۔
شائع 04 ستمبر 2022 01:15pm
<p>وزارت توانائی کی جانب سے وزیراعظم کی ہدایت پر نوٹیفیکیشن جاری کردیا گیا۔
فوٹو۔۔۔۔۔۔۔۔ ٹوئٹر</p>

وزارت توانائی کی جانب سے وزیراعظم کی ہدایت پر نوٹیفیکیشن جاری کردیا گیا۔ فوٹو۔۔۔۔۔۔۔۔ ٹوئٹر

وزیراعظم کی ہدایت پر نئے بلوں کی ادائیگی کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ہے۔

اسلام آباد: حکومت نے 300 سے کم یونٹ پر فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ روک دی، وزارت توانائی کی جانب سے وزیراعظم کی ہدایت پر نوٹیفیکیشن جاری کردیا گیا۔

فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ سے متعلق وزیراعظم شہباز شریف کے حکم پر عمل درآمد کا آغاز ہوگیا، اس ضمن میں وزارت توانائی کی جانب سے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ ریلیف کے تحت 300اور اس سے کم یونٹ استعمال والےصارفین سے بجلی کے بلوں میں ایندھن کی قیمت وصول نہیں کی جائے گی۔

وزیراعظم کی ہدایت پر نئے بلوں کی ادائیگی کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ہے، بجلی بلوں کیلئے ادائیگی کی تاریخ میں توسیع بھی کر دی گئی ۔

مزید پڑھیں: 300 یونٹ تک بجلی کے استعمال پر فیول ایڈجسمنٹ چارجز ختم کرنےکا اعلان

نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ جو شہری بل ادا کر چکے ہیں، آئندہ ماہ کے بلوں سے مطلوبہ رقم کم کردی جائے گی۔

حکومتی فیصلے سے ملک میں بجلی کے 3 کروڑ صارفین میں سے ایک کروڑ71 لاکھ صارفین کو بجلی کے بلوں پر فیول ایڈجسٹمنٹ چارجز نہیں دینا پڑیں گے۔

اس حوالے سے وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر نوٹیفکیشن کی تصویر جاری کرتے ہوئےکہا کہ وزیراعظم شہباز شریف کے کم بجلی استعمال کرنے والے شہریوں کیلئے اعلان کردہ ریلیف پر عملدرآمد شروع ہوگیا۔

انہوں نے کہا کہ فیول چارج ایڈجسٹمنٹ سے متعلق وزیراعظم شہباز شریف کے حکم پر نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا ہے،300 اور اس سے کم یونٹ استعمال کرنے والے صارفین سے بجلی بلوں میں ایندھن کی قیمت وصول نہیں کی جائے گی۔

ایک اور ٹویٹ میں مریم اورنگزیب نے کہا کہ وزیراعظم کی ہدایت پر نئے بلوں کی ادائیگی کا سلسلہ شروع کر دیا گیا، بل ادائیگی کی آخری تاریخ میں توسیع بھی کر دی گئی، جو شہری بل ادا کر چکے ہیں، آئندہ ماہ کے بلوں سے مطلوبہ رقم کم کر دی جائے گی۔

یاد رہے کہ اگست کے مہینے کے بلوں میں مہنگے ایندھن کی قیمت شامل کی گئی تھی جس پر شہری سراپا احتجاج تھے ۔

اس سے قبل ایک ستمبر کو وزیراعظم شہباز شریف نے 300 یونٹ تک بجلی استعمال کرنے والے صارفین سے فیول ایڈجسٹمنٹ چارجز وصول نہ کرنے کا اعلان کیا تھا تاہم نوٹیفیکیشن جاری نہیں ہوا تھا جس کے باعث شہریوں کو بل جمع کروانے پڑے تھے۔

nepra

اسلام آباد

electricity

PM Shehbaz Sharif

K-Electric

electricity bills

Fuel adjustment charges

Comments are closed on this story.

مقبول ترین