Aaj.tv Logo

ایران سے بھیجے گئے طیارے کی مدد سے بلوچستان کے جنگلات میں لگی آگ کو 90 فیصد تک بجھا دیا گیا ہے۔

بلوچستان کے محکمہ جنگلات اور وائلڈ لائف کے ایک افسر، نیاز کاکڑ، نے آج نیوز کو بتایا کہ ایران کے طیارے میں 50 ہزار لیٹر پانی کی گنجائش تھی اور جس نے منگل کو علاقے میں آگ بجھانے کے لیے دو چکر لگائے تھے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ایرانی سے آئے طیارے نے پیر سےاس کام کا آغاز کیا تھا اور کل تک 70 فیصد آگ بجھا دی گئی تھی۔

نیاز کاکڑ نے بتایا کہ طیارہ میانوالی ایئربیس سے آنا جانا کر رہا ہے کیونکہ وہاں سے پانی بھرنا آسان ہے۔

ان کے مطابق محکمہ جنگلات کی ٹیمیں مسلسل علاقے کا جائزہ لے رہی ہیں تاکہ کوئی بھی شعلہ جلتا نہ رہ جائے۔

اس سے قبل، کوئٹہ میں ایرانی سفارتخانے کے ایک ترجمان، 76 برس سے الیوشن، کا کہنا تھا کہ یہ طیارہ دنیا کا “سب سے بڑا فائٹر ایئر کرافٹ ہے”۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ ہیلی کاپٹر اس وقت تک پاکستان میں رہے گا جب تک آگ مکمل طور پر بچھ نہیں جاتی۔

واضح رہے کہ آگ لگتے نے جنگلات کی تقریباً 10 ہزار 700 ایکڑ زمین تباہ ہوئی ہے جس پر چلغوزے کے درخت تھے۔

ملک عبدالستار نامی سماجی کارکن نے آج نیوز کو بتایا کہ کوہ سلیمان میں واقع ان جنگلات کے قریب تقریباً 10 سے 12 گاوں ہیں، جو بلوچستان کو پنجاب اور خیبرپختونخوا سے ملاتا ہے۔

حکومت نے بستر سمیت دیگر اشیا متاثرین کے لیے بجھوائی ہیں تاہم وہ راستے میں مشکلات کے باعث لوگوں تک نہیں پہنچی ہیں۔