Aaj News

’عمران ہائیکورٹ آئیں ہم بتائیں گے 62 ون ایف کا اطلاق کیسے ہوتا ہے‘

چاہتے ہیں کہ ادارے غیر آئینی اقدامات کریں، لیگی رہنما
شائع 22 اکتوبر 2022 06:54pm
<p>فوٹو — اسکرین گریب/ آج نیوز</p>

فوٹو — اسکرین گریب/ آج نیوز

رپنما مسلم لیگ (ن) ملک احمد خان نے عمران خان کو چیلنج کرتے ہوئے کہا کہ آپ ہائی کورٹ آئیں، ہم بتائیں گے آئین کے آرٹیکل 62 ون ایف کا اطلاق کیسے ہوتا ہے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران عمران خان کے بیان کے ردِ عمل میں ملک احمد خان نے کہا کہ موجودہ چیف الیکشن کمشنر کا نام عمران خان نے خود تجویز کیا تھا، اب فیصلہ خلاف آنے پر چیف الیکشن کمشنر پر الزامات لگا رہے ہیں۔

ملک احمد نے کہا کہ الیکشن کمیشن نے الزامات ثابت ہونے پر ان کے خلاف فیصلہ دیا، عمران خان ایک طرف دھمکیاں تو دوسری طرف منتیں کرتے ہیں اور یہ چاہتے ہیں کہ ادارے غیر آئینی اقدامات کریں۔

لیگی رہنما کا مزید کہنا تھا کہ عمران خان موقع بے موقع بات کرنے کے عادی ہیں، ان کا وطیرہ ہے اتنا جھوٹ بولو کہ سچ لگنے لگے، یہ اپنے خلاف فیصلہ آنے پر ہمیشہ اداروں پر الزام لگاتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان اداروں کو بدنام کرنے کی مذموم مہم چلا رہے ہیں، پی ٹی آئی اداروں کے خلاف شوشل میڈیا پر ٹرینڈ چلانے میں ملوث ہے۔

اعظم سواتی کے بیان پر ملک احمد نے کہا کہ سواتی نے پریس کانفرنس میں غلط بیانی سے کام لیا، انہوں نے عدلیہ کی توہین اور ساتھ ہی نوٹس کا بھی مطالبہ کیا ہے۔

pti

PMLN

ECP

Malik Ahmad Khan

politics Oct 21

Imran Khan Disqualification

Comments are closed on this story.

مقبول ترین