Aaj TV News

BR100 4,597 Increased By ▲ 11 (0.24%)
BR30 17,781 Increased By ▲ 212 (1.21%)
KSE100 45,018 Increased By ▲ 192 (0.43%)
KSE30 17,748 Increased By ▲ 82 (0.46%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,360,019 6,540
DEATHS 29,077 12
Sindh 520,415 Cases
Punjab 460,335 Cases
Balochistan 33,855 Cases
Islamabad 115,939 Cases
KP 183,865 Cases

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے امید ظاہر کی ہے کہ افغانستان میں امن سے پاکستان کے وسطی ایشیائی ممالک کے ساتھ اقتصادی تعلقات مزید مستحکم کرنے میں مدد مل سکتی ہے۔

شاہ محمود قریشی کی زیرصدارت اقتصادی سفارتکاری کے متعلق آن لائن اجلاس ہوا.

اجلاس میں آذربائیجان،بنگلہ دیش، قازقستان، کرغزستان، مالدیپ اور نیپال کے پاکستانی سفراء نے شرکت کی۔

وزیر خارجہ نے پاکستان کی اقتصادی سفارتکاری کے فروغ اور شراکت دار ممالک کے ساتھ اقتصادی تعاون میں اضافے پر زور دیا۔

وزیر خارجہ نے حکومت کی طرف سے جغرافیائی سیاست کی پالیسی جغرافیائی اقتصادی تعاون میں تبدیل ہونے کے عمل کو اجاگر کیا اور سفیروں پر زور دیا کہ وہ حکومت کے اقتصادی ایجنڈے پر عملدرآمد کےلئے مربوط کوششیں کریں۔

وزیر خارجہ نے سفیروں سے کہا وہ وسطی اور جنوبی ایشیائی ممالک کے ساتھ تجارت کے فروغ، سرمایہ کاری، روزگار کے مواقع پیدا کرنے، سیاحت، ٹیکنالوجی کی منتقلی، توانائی کے شعبے میں تعاون اور علاقائی روابط پر توجہ میں اضافے سمیت باہمی مفاد پر مبنی تجارت اور اقتصادی شراکت داری کو مزید مستحکم کریں اور فروغ دیں۔

ریڈیو پاکستان