Aaj TV News

BR100 4,678 Decreased By ▼ -9 (-0.18%)
BR30 18,623 Decreased By ▼ -17 (-0.09%)
KSE100 45,507 Decreased By ▼ -105 (-0.23%)
KSE30 17,926 Decreased By ▼ -16 (-0.09%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,333,521 5,034
DEATHS 29,029 10
Sindh 505,930 Cases
Punjab 454,372 Cases
Balochistan 33,729 Cases
Islamabad 111,855 Cases
KP 182,419 Cases

وفاقی وزیراطلاعات چوہدری فوادحسین کہتےہیں عمران خان نے 25 سال قبل دو جماعتی نظام کےخلاف جدوجہد شروع کی۔2011ءمیں لاہورکا جلسہ تحریک انصاف کے لئے ٹرننگ پوائنٹ ثابت ہوا۔عمران خان پاکستان کی سیاست کا محور اور مرکز بن گئے۔غریب عوام کو توقع ہے کہ اگر کوئی انصاف دے سکتا ہے تو وہ صرف تحریک انصاف ہے۔

فوادچوہدری نے اپنےویڈیو بیان میں کہا ہے کہ جب عمران خان نے ٹو پارٹی سسٹم کے خلاف جدوجہد کا آغاز کیا، تو بہت کم لوگوں کو امید تھی کہ وہ انہیں شکست دے پائیں گے۔عمران خان نے اپنی سیاست کی بنیاد تبدیلی کے نعرے پر رکھی اور نئے پاکستان کا وعدہ کیا، جس کا مقصد ایک ایسی ریاست کی بنیاد رکھنا تھا جس میں قانون طاقتور اور کمزور کے لئے ایک جیسا ہو۔

انکاکہناتھاکہ عمران خان چاہتےتو پرویز مشرف سے سمجھوتہ کر کے وزیراعظم بن جاتے۔ آج بھی تحریک انصاف مڈل اور لوئر مڈل کلاس کی سب سے بڑی جماعت ہے۔عمران خان کا خواب ایک جدید اسلامی فلاحی مملکت کا قیام ہے۔یہ وہی خواب ہے جو علامہ اقبال نے دیکھا، قائداعظم نے اس کےلئے جدوجہد کی، آج علامہ اقبال اور قائداعظم کے پاکستان کی طرف بڑھنے کی توقع صرف عمران خان سے ہے۔